9 کی

721 کے سس ہے

وست

وگ 7 او و می ا

الما رامام اص رضاب نیدی

رظ

فان ڈو

مات وت وی کین

وضو رخ . ‫٠‏ ۰‫ سر ۶ بیرٹ ال

30ل "۷"۷“'“ ٭. . ہز رم نود زناے راد ۵ے وھ ۃجواہ 0اا

ا کا ا . 7 . / ۰+ ردپ

رت امت یز کرت میلس والمزیز

رط پاعال ٠‏ ا

۱ خواضہ اض ۲

۱ اذیا سخاہری ۳

یہ ایان ۲

۲ اوران

۱ حطر

٣١‏ وف ری ۷| حضمو رکتحلیف دیٹا ۳٣‏ ا ملندیماب ۲۴ ا سواہے ِ اؤہ دن نود ت سمل نک ار ل نول

۵ ا سج عمدری تیوک ا تماف والت

وف

٣‏ | مع قکاخا اہب

۲۶ یح یی خاففت

۹ ا یریک ای

|.م | سمش بیخفیدرت

ا ا سان یکماہوںمیںعررضیف |٣‏ راہید نکاقبول اسام ۴| اہل ہا کا اڑل

ودب ںکیلڑحنر

مرکا ے*۔ اب

فا ناسل ی ببادی ئے سم

٣٣‏ ا او سے بیان می ۳ حضورک ولادت ہمت

ٔ۳ ضرج ۳۹ ا بیت اکا مجنا

6 ع سیک اواب ٢أ‏ صلی ےکیادودھ پلانا

لا گرا بات

نت اک رک یفلانت ' ظافب ذادو یں خوںاے جلا بت ٹاردٹی

مھ اللہ رام

یی پان شر دی یل خونان

ومردت

ٰ ں کا ارام کنا

او

نا تر 8 خطکب برایاباۓ حر رکا صرالآرزا

دابخراب

و الا سم جھاہی پیک ۷میا

۹1 1 ھے کے ۲ حصو ۔کاروڑمہ

امسا ری کےبیائییں رما ملٹیلرل حم و رم اللعالإنمہں خلافت سد لتق می ںطزرات کفا رک ےمم میں ودار رایت حضمور کے صقر سس کافندت ً۴ گنہنگارا نس تک خزاعمت | ۷ء١‏ شفاعت کا بہاں تمہ پاصاواای لد سے یےجحوب لٹ ضراے' ےناپ یخال قرن می ںحضررکابیان کر تکےتت مہات حصو رکا قب 7 یک سا ما ادلکادایکنا سس مار

حضو رکا رم اکپ

مقر مق خکانشان ال -

تَا کے رکے عا لات نرۓےزہرری

مار نارق کے رل نات ویماولت' ےہول لا کے مرل

عم اددا عکا,نبان طررے ےا نواعت حم رکے اسماثےےشلہ

حم کرڑ

حض و رکا یر

لف ظیرانٹیڑاا

رونشری پک متام حقمر رکا اد ل اغخلوّات و صضتزیب سے ملا ا اع لین زیرکے

عم کی ففدرت

فآ اگ میں الات ے یادفیانا

حن رکم کلت

۴۰ ا مد خبرا قکابیاں ۹۳٣۱‏ آ من اسان ی٣‏ میاں

تال ےکااصلنے ہ ےکمہاجزےہندمالے پعط بنےتار ےکے زطاعتے ۷ مدر جا یا ”رے۔ے ہمت کٹ ےت گے ای ےکنا بے نوا دہ ساہنتےلا۔ :مل اوروریٹاٹم کےازا یف ےک ےنسا نیک رجہ در ض لع س ےک راس کیا جا ےکک یرے دیپ با ا سے را ےل ےرا رسے ےسّفیهنے ہ رر ےگ کے مہ ےط نیا ےہنْتیڑّے از زۓ ارَلے ب گب ۔خا کے ے فت ؛ےے ؛ خرگریے رزاتنے؛ اس کےطے ارم رے کے رداص پک بے ما کے ۷ ڑا أٴطایا ے۔ ا کے ٹڈ ےن ند ہا چڑے زینظم کنا سے کےمص نہ ےج ےک ےکر طیبہ تلم ےہول و ےپ“ سرو ر الف بے پ اف سے ' غَائ کے ۔ا ےمم ہک ےآا تک ڑکے اب) ہے ک ےم ستےبرے عاض ۔ بے ہج ےک۷ 2 اْارٍ جھا ہے لے“ پے ۔ جی رقتے طر کے اددما ن ےکی رکا لاہ الہ او رشان ےطیرہ سن اف مزربے کداپنے پیدری من سا عق اماک رک قے ہے۔ تج ہم یرہ ےکرآرے اہ ےکا ہ ےکرد ہے خرن قدابیصسے سےوواز تپ ہے قبدرل تہ فرش سے ےہ ےرا بے نے سروم الصّلوت کیت رز امکے ے اہۓ ذدتےوت ےک دا رکیا۔

فی ےکی دراو تد ےکر تھا و ری ا ےکا وشر کو ین نو رف لے ڈرا ئئ او ے سرت دالیم رڈے کے رون ٹکیلنوف ےکر ن ےک تق ےعلا زا ہے ۔

یازند

مخت جال تحعزت مصذف علا مق یں مرکم اتعام

۰ لیا“

: علض یلت دی نات ام نت گلا اشم انان اگ ماند ضز 7 و ناذا اتا ج ااعلریاررا س الفضدار ای سنّت ىا برعت لیت الیل فجت ا قلف بی ار شا دَاَطلْغفِ انان نوا 1 دی ایروا 272 رب نکمتلا تقر کو رولق افزاۓے ئے۔ پنے ال راو نت مود ےاع رکم ففضا بنا ہ عارف بالشرعصاح بکمالات پاہرہ وکرا مات :وین وا یمحیدرض ا لی خھاں صاحب تَمۃَ حر تََریش ره ےکصابکؤ فرایا ا تخب ریف ع کا یامدروۂ عل او پہونچایا ویزدال ڈپٹروچزراست نظاررصرت ١ن‏ کا درا یف دا ےا تب معز تح مل نے۱ تھیں‌طا 7 ۵۔اك دا ردلونصازیں اس فرست صادقرکی ےحالت نیرت ای جوکھ فیا یا :دی ہو یس آیاعقل معاش ومعاد دواو ںکبررجہ اع ہت دکرتارماںآ نکموں دیچھا علوهبری ساوت وتچاعت رعلومت داع رررت رصرتا ت خی ایگ 2 ا درب دجلال وہوالات تق( دا نی می عم مہات ایا رعکام سے عزنت رزقئوروٹزقناعت دق راک بیز رض ٣ال‏ بناجب رجا بی میمت ۓزنبلاجوز ںگگزھت/کزةتریآر وو ےکس ذا تگامی دنا تکوفاا زرل نےتحعنت سلطان ریسالت علالالعسلوق اتہک غلای ظزت ہی کا عدا لت ود ت کے نا تھا اش ان کے بازومےىمت وط صولت نےا سخمزۂ مالین سکرد گنی از ہے انید لائے مات ف۲ شا ملاک مناظہ دی کاعام انل 0-2-7 عافد خواے مال وچ زد اف رک ےھ ایا ہے

تےِرض کت رہ قا رام قطاجرس ال٥‏ کے طف قِوزدّ یہ سجنا بک دنت لیے نددستان سے ایس فوکیب س ےکا نٹھنڑے ہیں افتکا زاس دسے جو داس کےا ء ہیں لامش تھا علےسکی رضدمت روزازل سے اس جنا کل ددلیت تی تج قرف یسل رما الال با سام لباسط ماد وف جع َذ يك نضل:شئ یو مَن بنا تصازیف ض راس ہنا بککی سب لوم بین میں یں ہن سلین

۸

ددا عفن والھیش رب الظاری۔از امج الم وش یور اذ کیہ مو ول رسیدۃ ان ج سک ضوع وگرجالات تی رکا نات ہے مل اتال علیہ بک مجلردسیط سر وراقلوب یو تو بنطیع شور یی جوا ہیا فی اص ررا کان مج کی خولی دیکھنے سیاحلں تی سے وق ایں ماضا می انی نر مغ تال نع ف کے افو ںک شرع میں این سای زا نان من ہوا ہیا ن قب نا مرک سد طز اف فی لکوت کل الو یل فکیا۔ ا صولا لخاد مع :اق ضا و رہ وا مرایضاع دخبات زاےج نے ہی گر تکوقیت ادردجت ٹج کو تنصست بدا یلیر ال حد یکردس فقو ںکاردنے ۔یہکتامیں مع 7 دا یو شع ہیں ا و ہت ا ام یہ نی ںکیق دنا انی عیب شائع یقت وا یھر سا کی دامع با ال لاد مرش کت یقت رد یت کال نا حتاف دی سر میں پیٹ باچکا اواب الز ا رق فضا لع وہ دا باعل یں تہج اھا اٹ می سفق خمفر ای لا رسال ا جن التوا تب آعا رم ٹاللوال بگگھا۔ زوا ارد .ّااطاق ےت سے من تس مھ ایض یں دالس لی ا تن اص اما ال داب ایا ر۔ خی لاہ تی ایا بت دا لاقیہ برای الا ال رلالفس ال ٹا ۔ارضا دالاصابا یٰ 131ب الاعضشاب بج اتی ساحت این امشا انال رہہ تشوق الا وا ای طرق مال السمادو یی ام وا 1نا اق ی ال زرل ال قالط رلیقۃ وریہ .تہج الا رواح ٹیلنس لا اح ۔ ان در ررسائٹل مابین و سم کےسودات می دی ںہن لان ض کی یت ععزت نف یس م نے ز بای کش تعالی لک تد رہ ےکراتھیں صا ف کیک یں ط را ۔انشا ءاش ھا وتعالی جعکرھرا نہا دبالیست ون ۔(ن کے سوا و رتصائیف شر ساس وذےامتیں میں تے ہی نشین کے اہجزااول خی مھ ےک .ان کے با ینمی حسرت مہو ری سے نف خر(س جا بک تدع دین درا لن نات اعدا دسا رفا صلی حا کزری جا اهت دیرف ا یف بک ری الاد لب ھکوبار رہ یس دستتجق ہرم تدحن تما عجمت درا ئے رت دالوا صلی ن سٹرازکا ین قطب اوا ام زا ڈطو رر زناررٹنا موا ادادانا می لیوی رغری حطضرت بی دای شا ہل رول اح دی جداڈستدراریرت تی اد سح اا2 اض کيا تہ ولمَا شرف بت خافل ورای ححذورپر دم رض درتؾ نے ال فلاخت داجازت یع سلاسل وسنرصمٹ عفان یفلام اکا رہ بھی اس )جلسٹیں اس جناب کےطفیل ان برکات سے ض ناب وا وا لاٹ ررب العالمی نہ م نوا لف لس کو ہاو شدت علالت وت ادف تو نو راقزیں می مال ایا کے خا ص طوریہلاے اَم دَاِن'فْ انام خشی ایام زا سرع سز ا زرلام رت داصحاب دفدام ہم راہ رکاب ھھے تنا غاب نی گا کہ یعالت ہ ےآیندہ سال پرلتوی فراتے بارشادگیا ریب کے تحص سے تم دروازہ سے پا رکیدگوں بی ہے روج سی وقتپردازکرجائئ۔ دیکنے واے جلنت ہی ںک رتا شاب رف نتندہستوں کسی بات می کی ذبائی۔ لہ وہ

۱ ۹ ۱ اش تل علیہ لک ےای کا فو رہم دداعظافانےے کر من دا خقں دای المق حر عزت اع لالمل رگ لالفلاء ھزتلرلنایماحرزین رعلا ن جا لوم وغی عل ام کے ریغ ال زان ملغ زی القعدہ روزیچیتمبہ وق ت رٹل تہ کراکرا دن رس یا ہہنےکیگڑں ال :مر یخہا رت بلب ای مت دال اع تر سض ےل یج ى هد يراجُؤتا ندال ماز موم ٹب شی۔ا ہن وقت نظ رای جاک اتقال فیا نع میں سب ماعضن نے دی کڑگھیں تواتسلام زرائے تے جب چندافنفاس بای رپے ہاتھو ںکواعضاے وضو پریوں رگا دضوذیاۓےیں۔ . گرا تنظاق ھی زایا ہمان الش را دہ اپنے طوربرعالت بہوشی میں نازفظریھی اداذیا جس رقترح نے دنق رانے ما ھا دا می ایک رطع علا نمی نے ار قتابنرہ ری نکا۔ا درس ططرح لان فو شی دآئونہ می تن کاہے۔یہ عاللت ہنوک انب ہوگیا۔ا سکےےاتی وا یں تی ھکر زی :فیس ترمان ملا اذفوا ھا راس اوراخ بر دصہا لے ہو اع ای یکر تقال سے ددروززیل ای کاخ رلک ینتی۔ ہدرک نقنے حضور یر رت دیق ئن اؤہ ن دیھاکر ھت دال:قرس سر ام ہدکے رق نشیف لائے ۔ خلا نے عر ضکي وریما ںکہاں۔ اق متا واج سے یا ایا اب سے بیو رر گے رجمیمااللہ تعالٰ رجمة داسعة۔ : ذھب الذین‌ یعاش ؿ اکنا قھمم ولقیت فی ناس کہلں الاجرب لسن رعاءالناس ولیغرح ۱ یچمں 53 ہیں لگ لا اتا من لہ عقل اِللھماتھما وا رض عتھبا واکرم نزِھسا داقض علینامن برکاتھیا !مین گی بیجتٹ یااوحمالتٔحصمین وصوالله تعالعلیٰ سچّں نادمولانا حم وا لہ وعیه اجمعیں۔(میں

7

عیس عال سرک لص لعل رسْوْلولریٔم زی زمح موی فیضان یی لیہو ری کے دل میں اعلی ححزت موللنا مر ضاال صاحب ناضل بیلو- کیپ تصانیف نویل رک طباع تکاخبال پا ہوا شا زا اھت نوخ ہرم رانا خا ملغ ضاففاں صاحب دامت رکا لعل کی تی انی اس خوا ہش کاظما ریا ۔عزت نے فا کیا7 ڑا رآپ اعت کے والرا جم ولانا لٹ لی خماں ععاح بمقق برای اروا مہ تصٍیف ذو ردق شی یع کر یں یلیر دی خاش ہے۔اس بنا برکھف تکی دل خاش ا نک موچ کی میس وی نوا ضا لی سطیرنے ا سکی طاع تکامید ا ٹھایا ۔ا سکس کی اہمیت دیکھنے ہی سے“ لم کی ہے بنتدے؟ کاب ٹی دہ اص مود کنل ے۔ اع لاب ز بی سی اس میں بعض و بک اوراقی ا وط رادرالفا پور ہیں 1 دض مگ رکید کے یں او رکہیں برک خو رد ہبی ہے ان میں جہاں جہاں' پان تھا کرد با نگ یلق اورالھؾ سے عہارت بن ملق تی بنا کی اوجیاں بس وریکصی ہام جھوڑ دی کی جیق اکا

رض کک کرک فلعطی رہ یائے ادرلقط لق خوش وش ہکیکسح تخاس خیال رکواکیاسے اور رت کیکئی ےک ہکتاب کچ ادرمسددہ کے مین مطاا ضانع ہبی یاکراہی کسی صاح بکوکو ٹیک نظ زی اف تا یا در تک گی ۔قق ایا امن اس سے ہک ہے۔ یر ان ا رت سے شک کزاریسجنوں ے کا بی مارے سا تاد نکریاہے نما صسکرموللنا رآ ساحب مانڑدی رشن و رسلا مر کی شی کا شکرب برے طورسے ہم دانہی ںکرسکےکراموں نے نا رقت ا سکتا بکا مج فی میں عرف آایا۔ تا

۔ ٭ ےر

نف ھجب الین قادری رننوی خفر ا آمانفیا زگ (لہختیان بب یبھیت رہبع الاو لقنالھ مطالق ہ۱ ری رج تع

0 انام واللالكَخْلن التحِهو پراس واچپ اور دق یل قکوشایاں ہے نے تما مکنا تکوش ریف بورۓاشرت فیا اور او ںآ سمان١درزی‏ نک بنایاعائ انمت وی اش نحت ا سک ادرک عقول سے برترادر

وا لے باہ۔ ۱ : آد چنا ںآ ف داز رزناں جھاںگآییشں اھ دآسماں کرچناگ ١‏ یشہ یا سرخودبروں نیاوردزیں' : ا نوج رات محسوسا تم اوران خصوسات+ بت ضک رین ا وریکما را سک ماہیست یں جیان ہیں ادر 7 ِ ات] ری ےہ قاُ سے /تلبےا رز جانت(حقیقت ھرچلیاے۔ سے تنت ززنرہ بچان وہاںنہایٰ ازہاں زنرۂ دہاںرانداح ے_ لنعت صا زع اکہال اسان عال شا ہر انی ہی داش میں تام کیک تع مب وط اٹل 1 ادوس پرست او رکشت رگ اوراستواں پت بائوں ہس سیہ پیٹ یھ کالب زان نال ہاشت شک سے بنا ےکر زآن ےمان نہیں زمن دیرکس ود راغ ےتا جلاک رک کے ے اس سے ہم عو ارح مر ید یب نافع لک دنک ک نون می نی صورت کے بنائے. در اود یتما زم نکی ہے اوری س قد رکردریانین سے دای قد یجان بس کے ججائب زین سے زیادہتریں۔ پآ رآفیراوہا ساب مینست بررافق نکقل راجا ب نھست

ھردان لآموز مواوست دل از داغیاران" راوہت ی2 رازنیحمت دع دویتاجہاں ب را کت نہاں ‏ لو لقطۂفاک اورترکت واض زاب ہوا می :میں نی سک سکانلاش می کو تا دواں ہے اد

یں بے روا رواں ہے۔ درخ تکس کے ےبادةامنقامتبریرعاڑاے/آرہ سریپلتا ہیی تا وربپاؤکس کےجو میں نک دلی ےک دیوانؤں کے ان ردام وڈ سے الس ہےادد اہ ئےخشب ذروزیے حا تکرقی سے رورک سک جدائی سے ایت پمول نےکیاڑکھا لفتر, ان ہے ال ن ےکیائناکہ رات دن نالاں ہے گآ تی کرہ می ںا سکی ہونصرت موی بے : داز نلوفگُں اوت ہقاے ِ مزہت و ں٣کتبرس‏ تنک مال ے راتف ینا نوا ال لاہ اع ملین سےتحت ایا کا سک یتیج ادرتہلیل یں خغول ۔ :

7 ہمشس ایںگبر زرنگار گواہ ائر پر صیٔح پر دردگار کور مددکریرٹۓے ہیکت بررن رررزْنّ مامت بت لن یناں ءا نفوض رگشریی ور یڑٹ ےم

ہرجنڑہیں بے شما رمجائشب وبراشِب ہیں رجہ ب تر رہ ےک دی اج کور کاغز ا داوارن نٹ دیچکر

اس کے ناش پر ہیں ای نکرناہے اوران شکل وکمور تکہیں دی صا اش ازل نے ایک قب برک کساٹ بی نکی ہیا کس اس عر کی قوئ ا کا برا ط ہیں دای ہیں ۔

ظا پر دول تک درن رکا رتو ست ‏ پےمتصو دکاں درکنارڈِست

تملطف) م کیاج م فکذرتی نے ایک میں ری کون وراذزنا ت سکوکان لک رتی سے ۔خاک. ارہ

رہ ددشت می ںآوارہ پھرکی ہے ۔ ناک ہ خلا نت نربین گا سکوعنابیت بی ہے۔ مقرین ملا اعل یٰ۰ سید

یں می سات لاک برس سے شغول ہیں بکسال سیت عو ضکرتے ہیں ۔ خن شیع شیک وَلكرمی

لت ۔ بی ہم مدت سے تیری عباد تکرتے یں یہ ای نسا ددخونریزی اا س کا رک یکب لیاقت رکمی ج رخاوا ےر و تح نان و راس ے شا ورک بر اوراری مت رعثای تکوہیں یت .ہم اس سے ایک اگ موق پیدا بی گے اد راس کتام عالم سے برگزرا فر می مے یقتم ہست ارا بے نزعایم اک وازبائےنفتہ درد ناک

عزما یجس زا خی بت و ہے تھے اس کے نزک ای الین تے ۔اورتغیل بن عیاض بب راوراررنے تھے اس کے میں را ہبہ رتھے ۔ جیب جا یک بت تراش تھے سعادت الین ے٠‏ نک یگ جا درد سےعزت ول سے مقا کن ےآئےابک جھک ذرقو دی ان پک ار یکارنے گے ود ح ھی درو نکہتاتھ ہیں وی ددگااویہارے تب ول کالو گا دہ کت لہ اتا تا مِذتَ دب ردا ہنیس ہک ارنے رب کے پاس جانے والہیں۔ی دی نہیں وسیلےححدول طلوب اور ردان با موب ہے۔الغوِ ضس رن دریائ روح تا سکاجوش اتا ہزاراں ہزارد فرم سمیت ان ک تو ول بات وی ایک رو لتہول یہمڑدۂ جانفزا نا جا ما اط بش کک الک رید راک بل ماما وررقی قب ا سکاجس رک رق ے ہزاربر سک اطاعت اورریاض تکو 26 دم میں ملاکر: ما کرک ہے می لوت کوای کن میس خیسطان ا وریلعون کر کی ہے ادراھباعورکوای ک ہیں دورد ومقہور- اےعزیزہجان ہزاروں طالبو کیا س کا خیوری سے بر بادپے ادرلاکھٰوں دل وحتردریائے لا پیم ظرق۔ عارف وعالر نے با ادن الحَاِليف سے ای ےکا می ران ادریتخمب روص دیق ا سک بے نیازیمے

ٴ۶

م۳

فف دتیسا ںک سک سال ہےرقلات اک یم مارےا در ےکام می چون درا نان پرلادے ک ایی شان ہے اورخنا ہق سکی دا تکوشایا ںاگرارک :ما نک ون ش تھے جلاک ریا دکرےاصلا ٠‏ : عدل پر: یھ روس بکہنگارد ںکیآب رت سے دھ وکیا ککردے ا سکاجیاری ارت یں نے زی فا تا کےاعاطۂ دہ وفیال سے منزو گا دک قول برثی تو ت اگ ال پو سے مھرع ۔ جیا سکن سا من بارعا سکیا طاب میں مگ رداں ہے اورک 1 مدان کی ضر دب می ناو بے او کوک وب ولیک ردامن ددات سکیا سے -سطالیاںچوں علقہبردرانرہاند ' زان رنز ا تکے را راہنٰیست

سر فیس دقت آ پا حون قزای یسیک اد جال پردردکا راک ریا کٹ کے گیا الام لے وش ہوکرکرڑے خذما تع يہ لِم جَعَله مک قَعَرَهحْمیٰ صَوقًا إں سض دچان ال لیکو فزف عائیعنایت ب اکر اب مز کک کا جال بردر کسی باٹی سا ٠‏ می وش رقت یک رٍصفات توعینں ذات میمگری در سی آ‪ نام بیدا نا کیل تخصشس ےج بات وزراخفظرکرحاصل ہوق سے ہکس کی ں غاد وام روب بر کے ارول پ نہ کلت ۔ ز ناب عنقا اف رس ہیں۔ا وش با زآغیان ان سمل برمتاں مَمَاِلقٌ وی لو شک سے شنعلت از ری غاڑین بن داز اناسیں دلدادہم عندلیپ خوش آوازباغ ماکان تن خاوتکرۂ اب کین ]اف مقیرعضر کر نا٤‏ تَزْلَهنقيیٰ ۔ دیسقین۔مررصاحب اخلاس وَاغِ ری اتی الیقیٹ۔ س٥‏

جاک قرم بیطافلاک . ولا رخحطااواک

وت ال ررادع ۶تل مز ای وکتاب فام دررِل

1 یقاآدم ۔ردح ردان عا لم ۔ انان عان دچور۔ دلی لو قصور ۔کاشف منون۔ غازن عل وت ۔ اقامت مرود و احکا ِ ۔ تعدیل ارکا ین ‌اسلا ۔ امام جماعتِ ایاء ۔مقنراۓ ز و والقیا۔تانیا حر وت یگفق یں وت ۔ قب اواب صرق رصفا تاراب لم وحیا ۔وارثِ علوم اولین۔ رٹ٣‏ لات آخر۰ ن ۔ اول حروف مقطعات ۔ منغاء فضائل ولمالات ۔ منزل نصوصتطعیہ۔ اح بآیہئۓ بینہ جتحؾالیقیں ضس قژن ہین ۔تسیجم علوم متقرین ۔سندانمیاردمسلین - ات فص زان ۔خحز بس فکنمان ۔مظ الات ضعرہ ۔ مخ راخجااطییہ۔واتف امورصتقبلہ۔ وا لگانہ۔حافظ عرررخریعت ۔ ا یکفوبرعت ۔مائ رج اصلام۔ دا نع جیواصنام۔ _: لام ریا خا کی یناج منلقا ت تخت ۔س رز رط یقت اوس فکتمان ال لان ا بلال اق رشاد ۔صہاج اتطاروبلاد ۔اگرم اصلاف ۔اضشرف(شرزف۔ اسان جت ۔طرازِعللت

وی

7

رشن خی پچ نآ راکےباغ محبوبی ۔کلیچکستتان خوش خوئی لال جستتان خوبروفی ۔ رولقرافشن۔ ٠‏ آ راکش گگارجنان ین ۔ع نامییہملتان ۔ترؤ دیر4زستان گے ہا رشان جنان ۔ نگ انزاۓ پچرارغوال۔ رطیب دا غگررلُ ۔ راد ت جوہاردلجول ۔تراب ضس میمت ۔اوتیاے تو بضیرت. سرن علیہ فددں بریں ۔کردع داشھ رح دیا مان چس خیابان زببائ .مراف ےگلستان نال ححُلبندمارواین : نک ملا لزاررگینں نک رو جل سآ 3 1 رولق ہزم گیا دا کرش چرلنار۔ نیم اتیل ہا رازلار۔نگمت عن زا نکلزار فو مشک زان موس بہار ال اصول ممرربسان وت ہچ زرغ تماستتان ناوت ۔ فائیس میدان جبروت ‏ “کش سوا رمضم رلا ہوت بت رق كت جرروباغ دانان ۔ شاہبازشیان یت ۔طا مطزارجت لو یچ عجوبیت ۔ تو سر مقبولیت ۔ او بد ۂگلزارا برا یہ ۔ ارس بسارجنت تم ۔ امھ یع نو بوقھوں ۔ زی تکرگاہ گوناگوں ۔لع لآ ہدار بخشان زین دریقر رش مرضیدتی ۔ لگ شت ران الم سک دریان رکا ن اف یاقزت لخاسکان۔ روج روان عحقبق دم ران ۔خزازہ روا مرا زلی گنن جوا رقرسیہ کر حطاصاند یسا لس سفاوت دعط درا رت دا ہیا رم کے نک ررض مالی سے شام جان ۔عط مین دا غج سان ۔ وہ راعزض وجواہ رر منشاءاصزاف زواہر۔ غخزن ابحضاس عالیبہ ۔مورین خصاث صا ۔مقوم وع اتہاں ۔ ریع فصل روراں ۔صلمل الواع سا فل۔ می لٹویں الہ ۔اخت ریرج دلبری ۔ خورشیمدسماء سردری ۔آ برونے مشمۂ خورشید پمرواضروز ال یر۔ لا لىدڈادان ار با کا مان عفاے مین نی افو فور دیزہ ابائیم وآ دم 2 2 گاستاں ۔کمل ابتاب با غآساں تشرقی دائ ریچ تنویر مشر جآ ناب می شمسس چرخ استواربواغ دودان الاء ۔ گ گا رنادکرنبن ۔ سار فضانےقاب تسین ۔ نہر جبین الذار ۔ فرع جج اسرار۔ عقد کشا عقر یا یاے دیرڈیرمضاء ۔ و رلگاءشہود ۔مقبول رب ودود۔ بیاعض رو تھ۔

طز نفک تم لوک الزارہایت ۔معان شموس سعادت .وم روک انسائیت .سام ٹر زرایت“

تع ھتان ماہ مضور۔ نیل فیک مرک ذر۔مطلع الذازنا ید ۔ لی برق دخ یشید آئینے جال ردی۔ برق ماب د ون مشعل خورحاب لاہکاں ۔ تربع اہجاب درخناں۔ ہی ل نلف واہت ۔اعتیال اع بات زداۂ زین رآسماں ۔ خی طکرة نعلیت رامکال مع نین ضراکتاي زاويلَزیبأش تال مصفمدآراغ ری سوں ۔رولق خلا تگرروں ۔ معون ہا رخاوت ۔منطق1بر وج سوادت۔ ادح خدب افلاک ۔ رو فیعض اگ ۔ ( سد مییدان اعت ۔ اعت دال میزان عدالت یسل خلرد سی عاوی سطو رح گرامت طبیب ہا ران قلانت ۔نباض حوان شقادت ۔علاع طبائع تلق راع رنّضارہ برا ش ریضا بت مہو ںضعیفان امت ۔ قرت داباے :الو ں ۔آرام جاں ڑے شتاتاں۔

,

قلوب ڑم ردہ۔ دواے د لمات اضسردہ ۔ مقدملز قباس محرقت .مہ رقواعدنیمت ۔عقل اولرققول ٦‏ اط وزوع واصول ۔ہّوہ امتترلے ہا دی عالبہ ۔غلاعہ زارک ظا ہو باطنہ۔را بطاعلت لول۔واسط؛ باعل ومجعول۔ درک تایح صوبات ۔ بط اہر رجروات۔ جا طالف ذہنیہ۔ ا رظازجیہ ۔حخقت عقائ مکلیہ ۔ دا قف اس را رحخیہ مبطل مزفرمات فلا سفہ بت براڑ تقاطحہ۔ این امکان دوجوب ۔ واسطۂ ربط طالب ومطلوب ۔خعلہ داستتا نآفرییر. درس حد سس ہجرد ۔ الب صاتک طیقت ۔ داناے روزحقیقت ۔ایات رھرتمطلقہ رہن اعدیت مجردہ۔خزییۃ ا سار یوین افوا زی ۔تصفیقلو بکاطہ نزک ضس فائضلہ ۔س رخ تردبوان اززل رخا تق مل۔ ُھزر ع حصنات ۔ترغیب اہلِ سعادات ۔بجع حاسن فتوت ۔کفامت وا خلقت ۔ پا ری سیل رشاد اسب ب آواع رسراد۔ٹیرازہ وع فصاحت .یھت عسائُنَ بلافخت ۔ رج دبا رج ایت ۔لس ڑکیا اک یں ا ہت جصیخووا افت ‏ تی اونب اصوں بب بیاض رتخا بر پا تید ذادربصاٹر۔نقنداےمصت ہس مختلح زج قیر میز یا نزل اہرار ۔ مفیدمتقیدان اسر لوم درقلا مد ۔ درج جوا ہنیس اصولساممیس ۔ روض ۂککستا نتقدٹیں ۔ اسیا علوم کم لات 1 اشۂلعات ۔قرلطقات یا دم رم نے دن اذ تنرع جت الف تھروع واتعات اتی کت شض انبیا: ری رمعارٹ اصقیاء۔دلیل منامک طت ۔تفیٰ رباب بصرت۔ وسیارارفتاح ہپ "یہت ارداح۔ غاز نک زقائق۔ درمتتا رب رالق ۔ درو جوا تفہ مشاہ مفا تھی ۔ جا مع اصول فرب مار مص رماع فی ول ہنظوز مارک عالیہ۔مخزا تقو لکاط ۔ ماق طکقاب گموین۔ "تما مطاب مرتیں ۔اضانعیربن ؛یان ۔ رج عنین انمان ۔مع شرییت دنک جع بر حعدوت وقدم فلاصہآرب سائککین ۔نتماء ماج عارین ‏ شف ان دین نز اوت تین .زورب

"٠‏ حقیق خی یا توق نی نا خذرت وا حافا ماع ممادت کت غطاہبالت۔ اوائقاخزائن اسر اضق برا ؤع اذکار. عالم علوم حقالق بب تقوب خلالق یب مجالس ابرار ۔ پر 1 دن ایا ر فرب مطائف علیہ جج ہقاصرصتہ ۔ یا الذار صا یع ۔آ یع تا رنلوج ۔حادیھلؤم مھایقین .مان خفاءلاحقین ۔مورن جیاشب وفراب۔ ما زمکارم ومناقب لق نضی مک رمنتنب اریہ بین مرو ایقان رع مین امتان یی تنشضابہات رآ نی ۔خایت بیان اضامات زقان۔

ٹھج دلائ لکازیہ تھی برا ین شاغی. بر اہ لتطہ ا رصغیر ےکی زخواص بھارعرفان۔زبرہ ارب

ان وت معارج حقیقت لے ارچ مرنت مو م روط تق جات بیع( 4عابگا انتتلو بملنات۔صفءیبا ہج طمارات۔ وقایاعکاماللیہ ۔اف ہی نو یەصیہ ۔ رصتورتضاۃ دحکام۔ایضا ح یس ایام .وذ رالذارمطا لع تنتوی رمنا رطوالع کال برو رسا فو طلحت اوارق ججلیہ۔

لس : مورونتحج باری ۔ایٹس فذرسڑی رواب ررزرایت ری مفشور رسالت۔عدی/ تہا و ولظاث۔ ام کنوز ون ما مز محص مضررت عرارت : رح سوا ہیارک ۔صرلح شب لان رنج وجب راکا تاج افاضل لن پھرفضائل ۔ناعطق نل خطاب ۔ مین نصاب اع ساب ینمض ٹیش والی ۔مر رر کانی جتبد ین ٹورکنوں ۔ وجب سروریحزدن سعرزح برا خاطع ۔نقایہ دلیل بماطع ۔ را فع وا ریا۔' ا لفرظدا عضو رمصباح عنایت ممتعطی زادآخرت ۔عمدہ ختوعات رحمانیہ مخزن موا ہب مرنیہ تج را دلل خیرامت۔ معان مطالع مات ۔تقما موس میمط اننقان .بلاغ مین فان ۔نرخیابان لوحید ۔ اذ ری ن نورڈ ٹمس پازق مارق الذار۔ ردق رع بستتان ابرار۔ نا درقلزہ لاعت ۔آ میا ر چئے لطافت رات ابرسیرافی۔ابربہارشا دابی حا بک رانا سخادت .یسا نکیا رعذایت .کوڑ یور قیامت لبیل | جنتہ:آب حیات ہمت ۔ ساعل نجات اخّت ۔ دو جح چچھممرجیواں ۔آشنائے دریاے عزان ۔ ےه

سر شابریں جاپ‌زماں ‏ مر مج ئٗ لطفِ یزداں

بہاریشت جحنت رنک دبولیٹی بہضت زفلک اے زآلیٹش

۱ ابر ازم او آضریرہ عبرم را سای او اور دہ الشمالگ لی تر ال راج وا مل يك بَِ مم الوب مَالَذَْض ۔طلمالْخَت وا كه عَاوَدَايةمَے بنا ۔ شَي ین مکل ابع کر بلاق عَيلير لن 0-0000 کاڈ ناک ة من عد الاضات ۔انیا رحکتٹ الاھرۃزإھرق من امصنوعات۔واثار القامرۃظاهرق من ا مقں ورات ۔ تفٹع من خفیدثٹ قلوب الابٔیاء وا مرسلین۔ وتقشعر رخبتگ جلودالاصفیاء والمغلصین مخغضع دون سرادقات عزتتث جاىالعظمء ولا حول خیام ۔۔۔عظتت اذھات الفضلاءع۔ العالمٴلہ ناطق بایات وجوہٹ وا فلق ہاسرمستۂ ی بعادجود لگ ۔'طمولال صفائٹ فوق ظہودالاشیاء بط نکنہ نا تٹ عن معرفة الادیاءآ -خاتٹ العطیٰ عن الاشہاہ دالامثال ۔ وتنزعت صقااژٹ العلیاعن العں وث والزوال ۔طس تیر ایصادالھارفیت ۔ وازاحمکہریا ٹاگ افکا رالع الین ۔عققں قں ریگ لا نل با امل الانظار دگیا مب صنعتٹ لاتصل ال کتمہ] الافکار۔ سلقتتا فکیفپسںالخلوق ال اکتناہ اذالؾ‌سیلا وجعلت* قاق یکونٹٰ ا جعول على ادراث ا باعل دلیلا۔ قصرت الفھومعن وصفلمائٹ وارة العقول ملاحظةجلالٹ۔ تعالیٰ شمائلٹ العظیم۔ وا تفع سلطانك القدیم۔ رہناانلٹ فالغ ! وغایة ا مقصود۔ والموجودق لکل موجود۔ وا لباق بعں کل میں ود۔ لٹ ا حقِیقة حة وما سوالٹ الج از ومنژٹ الیں ایة یقینًا والیٹ الا ز۔لااحصی ثناء داتٹ دصفاتٹ ۔ و

وا لااستطیمکنەصفات دلوات اعضایجیعا تکلم عل لی ما شرحت صد ورنابانوادالں‌ایة ووضعت عتنا١ونارا‏ لضلالة دارسلت وگ پالمدیٰ ددیت احق لنظ فو علی الد ین کلەداگو الش رکون ۔ وأعدت لنا ما لا ولا اذن ممعت ولثل هل ١‏ فلیعمل العاملون۔ واتممت! لنعمة علینا بفضلك العمھم۔ ےت الیصول ال طریقٹالمستقیم لٹ ال عالہقاء۔دمنٹالجوددالعطاء لامائماعبٹ قض‌ اك ۔ نواعی امقاصد الیل ۔ واُزمة الطالب ہیں لگ ۔ ذأمئلك اللَمُمان تعل صلوٰتٹ ۔ دنوامی ہرکا تك علیٰ مد خاتمالانبیاء۔ دامام الاتقیاء ءصفوۃالانام ۹ ام۔ورحة للعالمین ۔ وشقیع امن ہین۔ وسیں النبییت جیپ رپ العالیت ۔بشیر : قات۔ وزل پر الف سں ین نہی المعکم وا لِلمة۔ وسراج العل والمں ایة۔ برالا نواد۔ معن شع اش ر(یةالبیضاء بارع الرسل والایاء داکب انیب والبراق ۔صاحب لوَاَلفات ۔ نوردں قة الرتیة العلباء و2 رح یقةاشفاعة اگبریٰ۔اشان عیت الخ این العالم ۔قطب سہاء العنایه ۔ بں رفلك الکرامة ۔ ذاشرالفیروالصات ۔ ماق ای لطغیان ۔ باسط مماد العں ل والانصافت ۔عادم اساس الجوروالأعتسا فے۔ الع إفصل اانطاب۔ ا نض ل من نطق ب نصں ق والصواں ۔عزالس ب وا جم خطی!لانیاء بس الام والمریٰ۔صاحبالمقامالاعل ۔مشیں تما لمدایة مد قواعداسیاسۃھ یی الاطلاق ۔ائیالضلق علی الہ خلت ۔امین الہ عل الارض ۔شافماقلق ہوم ایس نوداللہ النی لایطقیٰ ۔ مفتام خزائن الرحمة ۔ شھیں الله یوم العیامة۔کنزالفضل اجود۔ شفیع الناس فی الیوم اللوعود۔ سیں الثقلین امام القبلتین ۔ دلیل ا'غبات۔ ع . الزلات ۔ معں ن‌المالات ۔مصمح السنات ۔ مصیاحالدتیٰ مفتاحالن ری۔ ں ۶ 2 الوری ۔اشرف دیع نات ۔جیب اللہ المنان۔ قد ر× امعاب الوی والتنزپل۔ لات الضرلٹ والایاطیل۔ رنیع للقام اجب الاحقام ۔اکّل المیجوحات۔ا”ا'غلوا۔ ا لِحق والیعمة ۔صاحبٰ لوسیلة والفضیلة ۔کرمه عمیم۔فضلەجسم ۔ ذاتھ علویة لا سر منں 2 صفاتھ سنیة ۔ “سایاء مرضییة۔ لونہ مل ۔ وجمه صلع۔ لسالہ فعیم۔ 20 ۔علمہ وسیم ۔ قد رفِیع ۔قلبه سلم ۔ شا نەعظم۔ایاتہ باحرق جزاتہ متواترۃ اللہ حمودۃ۔شفاعتہ مقبواۃ ججمتہ ساطحة ۔حکمتہ بالغة ۔ نبہ ابرامی۔حسبہ اسمعیلی گا ۔فریہعلوی۔الطافەكریمة ۔افعالەجمیلۃ ۔اخلاق4جیںة۔اوص ا تھجلبلة۔ دینہ

۸

خبالادیات۔ذدھنۂعیںۃة الإاذ مان ۔جبرثیل ومیکائٔل وزیراہ۔ ان ھی َ الفلمان عبیںہ واحورجوا ریه ۔ا حنان تصورہ واطلاگکه حواریه ۔عوالموصوتبالرامة وا حُصوص بالادۃ۔المتصف بالصفات الکاملة ۔اممں و بالاخلات القاضلة ۔المبعوت من از مالقبائل ۔المبعوت باعلی الما ٹل ۔المنصورہجنود ال لائٹ ۔الٹابت تی المغازی ادماراگ ۔التکل ‏ بجوامع الکلم لڈم الکن ہا لطرلق الا تم۔ الحفسں قی الکلە مال یی الوفق ہا حخق العظیٔم۔امتقں س ع شوانب النقص والد نات امویں ہس اطع الم روا۶۶ بینات۔ا لعاف لمہں المعھود۔الستوفزتی مرضاة الہ ا لودود ۔ ا حریم ٤ل‏ لسابین اروف ائریغیم بالؤمنین ۔القایم بالعدل دالحعق۔والمامور بای بروادرفق اذواعی دوحی الله امنان ۔الںای الی ا لرعیم! لرخلن۔انقائز یا مطالب اللطیفة۔القلص لی اللواھب ال ریفة ا لھادی باقرہ ب الطریق ا ی جات ۔الشاسد للرسل بتِلیغ الرسالات ۔ ا لطاى ا مطہر ےت الطیب امطیب ۔ ا نما لا قب الرسول المقرب ۔الامام الاصیل ۔ اشسیں النبیل ۔الرضول'' الکریم۔النِی الغنی ۔ا مصطفیٰ وا لجتیٰ۔ لولا: لم تلق الں نیا قریت البركة بن اتہ الکرمة د شرقت الانٹس بانوارہ ا مضیة ۔ظہرت عندەلاد ته داقعات عظمة ۔ ودقعت لملة | میلاد۷اارعاصات جب3 ۔اللائکة بەحقّت۔والمواتٹ بذکرۓ عتفت ۔ آ[ہ 'امعلی الیجوەخرت ۔ قصورکسریٰ من هیبتھ ا نکعریت۔ استثارت بضوء ہا رض ارم خضہت ٰ موذںہاسیة دمریو تباشرت بە امو رق البنة واهتزالمش العلیٰ ۔خیں‌ت الذیران ' الفارسیة وحریست مماوالں نیا حبست اطردہ بسلاسل التار قعت رؤس الَ ت2 ' بمقامع ا افسارِھوالی اطمس غیا ھب الطفیان بنوں۔ واضاء مطا لم الاکیان بظہو و '' اقاض بحمة علی العالمین فوفاھا۔ نمض یاعہاءالز: سالة فاداھا۔لامخل لی العل ولمامتل الاعلی۔این للٹمس یںکال اب اذاطر دای للخاب وجه کالنیرالاکبر۔ واین لاٹنی ‏ ک فکا !عرالزاخر۔ وائٔ لع رلورکالبد رالانور۔فہےعان من ضور ڈلاحستهتصویراوما " خلق لەی العالمین نذیرا سەیاعاشقین تولموانی وجمہ ۔ عل اعوا لسن الیل القرہ' لمیات ق اولادادم مثلہ ۔ٛمامعی مل احدیث مستں۔ صلوا عله بکورة وعشیة۔ ۱ الف الصلوٰة معالسلام دزیں دا ۔ارسلہ اللہ تعالیٰ میشرالؤمنین پان لھممن اللہ ذض(ہ'' کہییا۔ واتزل علیہ الفرقات فیه جیا ذکل شی ٹیکوٹ للعالین نظیبا اسریٰ یہ لیلامت '' . المسییوںالسرام ال المسیں الاقمیٰ ۔واطاحہ على ملکوت الملوات دالارض ذیری من ایات رید الگا اتریہ مکاخ النخلاق دمحاسن الاضال ۔ وقں سہ عن النقائص والشم و رق الفحوال وال‌مال

٢۹

به بفیان الرسالة ۔وا نقن نا به من الطغیان والضلا لة ۔غفریشفاعته ذ دوب عباد×۔ بطلعت ہک روب عّا دہ اظھریهع لی العالمین تجاب الادام رد الِحکام ۔ وامطربە لعالین “عائب الافضال دالانعام ۔ شیں به قصی۔الارشادبمں ماشرت عل الانمںام۔ 0 ا ےسےکاظ تو م تم به دلوان النبوۃ والتبلیغ۔ او جا ان ‌العطاء وا اٰتسویغ رم باضمام الگرامات کوٹ ۔اددعه ٹی لاب اضراف ۔ واخرجه من ا(طون الظرافت۔ےە لمالٹسپ الع ی فلیسکمٹله ۶

کا 5 قسیب منعممتشرم ۶ × اقںمه ٹی کل خیرلاته اذا کان مدح فالنےیب مقدم بھں

لتورابین ۔والقوی اتی ۔ ستںجیع الانیاء والمرسلین۔الن یکا ت تناد دم بین الب ء الطین۔اطل علیہ معاب الرحسة ۔دمال الیەظل التَإعرۃ یپ خیٹ ٹاداالفروالطتیات ۔وممهة ا ت ددفا ا تالعنایة والٹص بت ۔ مت د ںا خاضة تارالعد‌الة ۔ولڑإحت من غرته الوارالسعا د3 قلماصل! مروالعناد۔ وقطع راس الشرژث و لفساد ۔القلوب با ذوارہەالساطعة امت وَفَْقٰ الکروب بافضا لہ الف ملةکشفت۔العوالمبطیب کرو تعظرت۔والرسالة بنسبتھا اليه باعت۔ بساط قریه منسوط تی حضرق العزة ۔ولواءعزتد مرفوعة ا ی السماء السابعة ١ذ‏ زھرت دوجودہ ریاض العرفان ۔وا تریت من جودہحیاض الایمان جلبت ا ی حنا ب فُعته الکمالات الاب یة ۔ ووجھت شقا عم ین ۔ داته العنایات الازلیة۔عنایاتہ مصروفة :. رشفاعةالغاطہ ۔وخززین دولتہ مفتوحة لا اح ح اج الس اکیں دجو الال منتتبلة لیجنا با مقں س ۔ ومحاسن الافعال مجتمعة تی حضرتّه الا س۔اول مد ايج عریجه مقامات النبیین۔ واخرمعا رج ترقیه خاتج عن‌طوت المرسلین ۔عرجا ی سدة ۵ شوول ۔ قحتق فکا تن قامفوقشیت (وادیت کاخ لاد رہ تد اح رحیط زا۔حرینواله ۔ جعزت العقل عن ١د‏ را لگ اسمرارچ۔واستنارت الٹّم س من ضیاءانوارلد لابا ہسننہ افضل الوساگل ا ی الفوزبالن رجات ۔والاتصاف؛“عتهاج لخخائزامالات ات ۔ ملا وجار ا لقلوب ہمیاہالعلمروالمںی تتل(طم امواچا۔ دی أیت النذاس وُت ثی دن اللّداخواجا۔ ےج ملاوالفلاء میں 4 خرق الماء بسیرہ ہٍ ماساغ ناگ لغیرہ ہہ صلواعليه وسلموا ی/ ہراکان دی برای الہ ععف الانبیاء مشمملةعلی یات جلال۔ وا یاتالجلال مقترنة برار سے ا ال بکما نہ کشف الد عقالة و حلت جیع خصالہ و ضلوآحلیة ا0

۵ خسف القرإعالم عمزالیٹ ریکماله ٍ نطق١‏ مجر :علالہ ؛ ا

۲٣

قد جرتالقضاء وفق را یه الصائب۔ فاسطعت الاقاق بعد لەالثاقب ۔روحەامعلی سیجع الافاق ۔ وق العلیامنبع الٹخلاق ۔١فتهاذت‏ خیراکم۔ ویںہ یداللہ فوق ' ایدیهع۔ وجمهکاالٹھار‌اذا تجلی ۔ وشںءکاللیل اذا یغٹی ۔ مںحٌصد رہ الم تشرح ذدٹ صد ركث ۔ووصف ذکرہ ورفعتاللگ ڈکرنٹ ۔ نزل حیٰتة لمرك۔ووردی قليه لنثبت بہ فوادلگ ۔ظہیرہ مک علی الارائٹ ۔ وراسہ مبد ءالمشاع روا لمد ارگ ۔|اعر الزاخرسائل من کق دہ کالاکت من محرالزلخر وا لنی الکہرتاظرا لی عبنہکالمین ای ایر ' الدگیں۔ یتلالِستافوجمه تلالگیں الاتوار۔ وتضوح روج حں یه فعان الوردال حر 'عرق خدۃ اطیب من السك والعنیر ۔ دجلدکفه الین من حریدالچنہ تعطروت الضیم من عرف چسد× الشریف ۔و طابت الذرواح شمیم‌ مد اللطیف یقول ناعته تما رقلہ دلابعدہ مغله ولااحن یراہ اقم اذرب باب مولدہ واطات الیه ارض مگره هو الڈی اضاءالعال ٹمس مں ایته پمں ماکان فی ظلمة شتاہ ۔خلفائہ مصایر الس ' القد دنجحوم اشمع دالیقین ۔ واصعابه مفا تع خزاش الانس وہد ا مرا سمالدین ۔اھل بیته حفوٴطون من بج العصیان ۔ وا ولیاء امته متطہرون می دنس الطٌغیان ۔سزاللہ علِيه دعلیمماجمعین ۔ وجعطنا با نصلوٰع علِمممن الفائزیں ۓ :

و تا علوم دیمیہ ادا ہران فنون اد بیہ ظا ہر ےککلام ابی باد دقلت الفاظ دمبا اس ترزلطااب ددشت ہ گرا حاط ران کا مکان اش سے با رہے س٥‏ دک العام فی ال آ لکن ِتتاصرضنہ انوا اط سے ذرینعرآں مسا گففوں ذانوامت صدمال یو ں خناززافِ يا رت : متام نیل یں رن مع ور ےنقول ے کہ قرآن خر اکاخوان ہے علم حاص لکر و اس کے توان بت ررقرت ۱ رح ہوک ثت یہقرآن دای ریا اوراورروضی اورخلارنافع اورکعرت نے تک ادر تجات اپنے روک لے مب ٹا نہیں چو اکہ راع یکیاجادے اورک ہی ہوتاگہ سید عاکیا بارعا اس کے شا یں پدئے اور مرامانییں ہوا کت استعال سے ا سک ی7ا وت گزو را تعا اس للاونٹ بی مم رخرف کے برنے ت کو دیس نی عنایت مزا مئےگا۔ اے خزیز قرآژن رہب رسنا لکا ٛے۔ يَمْيِئٗ إ لیٰ

ٰ۱ انگشد ادد مم زع ط لبان ء ثُنول مین انتا مَاهُوَهِفَاوََحْمَ لِتمَمبینە تاب قرآ نآسانن دل پرطا نع ے ١تث‏ ن٤‏ لگ لن کر دِمَکَاتَ دہ کَدثٹ اور سن ہکرہ قاف اُس کے ہیبت وجلال ے خاشع نَزاَثْزَشَاهْذَاالمَراتَ مَرْجَی نَاة حَافِفَمَتَصَتِعَاقِت حَشْیَوَ اد سے عزی زس رآن جمام مقاص کو تعمن اور ین دی ے مطالب "کان ے ۔ اَدَتمْيَلهمم]َتَا اْرَلتَاعَيَِك الِنمَمِرعَتِہَئرۃ عَ

۳

کر نقزم بے شت دکیاخوب کنا س ےکس ےآ نکی تا بب اثرےدر : س پرے یعنترژن بے اق ہوس ۔ بیضادیآیہکرییہ اك اللہ يامَيِادل

انہک فی ہیں گلھت ہی کہ یآیت سب آیات قرآن سے جا مع ہے ۔عخان بن عون سی _ ۳ ا لے رر قرآن میں صرض یاعت ہوٹی 2 شی مد ناتة سیف اس پرصادقآاہے۔ سے عزیقرن ایس بے پااں ادردریا بے

سے

چا ورام علوم اور سوک شال طیت اورشریدت اس دا ےی یں سدقت ۱ من ا رک رن گ رام عال ا کےجھاِ ویقاخب ڈکرکرے لیوحت میں سےا مرن الو اد عَز مع ادرج جن وائنسبمع پوکراس کے معائی اور ضاشن میں ھک ایک تفہ برکاحقمطلع زہوں شی لک تَا مت امالکیلتِ ری لنوں ااسرقِل تسشن اق تح انم ما٥‏ گبکر میں رت لہ لد یترگ کل اس می لقدرامکان اڑا 1 اڑۓعے ای یی معای۱وںضاین“ ن بھائیوں کے نۓ وگرکرنا دی لسعارتے اوڑوجب و رآخرت ارزا خقیحق رس (بالقص رفلمل البضاع تک لعصیت جفا کا رڈیل وخوارروسیاہ گناہ ۔ا جرح الخلق لی ا الخ ھچ شی پلی وی عاملەادله تھا یٰ بلطفہ الو محفظەمن نہ حیضدی چندادداق صورۂ ال ضر حکی سے میںککتتاے ور نت کا نام الکلام الا دسج پ ‏ تم یعلت ا ستدداد وق بلیت رم وقوف نہیں ے٥‏ ٘

ا خونر :حر نض رس تاواتمرز آ وودہ تحقیق مہہ از اک بود ١‏ اےعزیخرد ل وی دوک مدارکاراحسان دعنایت پرہے نذا متعداد وق بلیتہ ایک ق مکہشت ِ- ارل مفلوقات بی پیداکرتے ہیں اوربے سالقہ طاعت اور بلا وا سطہرخشت تھا 7 رے لہ فرائے ہیں۔

2 ود عفان ے جار زیر یں پیدا شوراڈ ای توشر اآزرانتربتصسہارغای مات رہ کو ن ار اور ے مابگی موجب مزبیعنایت ہے ےت

2 برہتہافتاردرراہ درو بہت رآ خوشید راہ کی بت تنبے :- استالیفے ا| نیا عوامنقصدودسے نز اطم رفل وکال اس ے ےاکمقا مق ار 1 اون تن تح کیج لے نو لا 2

۲۴

رع تر ککرکے سہل سمل بایسں ج کو شحخص بے شحلف سد لے زربان ار ددم ںکمی جا ں١‏ درنبض' قصص وحکابات واخاروروایا تکتب مم وقیہ اوران کےکقوبات او رات سس ےک الف شرع اور بضع ووتع تما وت رکا مقل گے جاتے ہیں ارت ہگن اختصا راس حص اس نس کا کےا یج سکی ردایتہیاعجارت س ےکوی مامون قل یا تنب کیاکی ایک یا دوسرف اغتیا رک جاۓ ‏ وزنعضمون سے بل کے جا یں ۔ ' ف:۔ ذکان ید حرین اسعلیل۔ مس +سمسسلمس جحاج ندشابدری ۔دت دیوعیسیٰ ترزی' د:۔ اپوداؤد مر الو یکن نسائی ۔ ظہ:۔مطاےاام انف جم :وع دیس ماجہ قر زی ۔ سی :اوہ دا ین مان راو کیھی داری سریدی ۔ کی طبرنی ‏ ق:۔ دا نطنی رک :اک مع زا ۔ئی :سی بی زریہ۔ہگی امام ادن مین بل ۔رح عبان ۔ رح مارہ فیا رمقری ۔ن الو ۔ بب :۔مجیالسنۃبفوی۔ ٹنوی ۔ عھ میجع اب نخ زیم ای :من الفرددس دلی ۔ ابع عوانہ ۔ رخ جع ا بحوابع سدوتلی۔ خط:۔خطیب پخرادی کی :اھ مب ؛-عالرزاق ہل :کا این عدی ۔کی :سب الین زکٹی۔ما ؛ لوط سے ا تح مرو ۔بزاز۔ سح :۔عافظمفادھا حتف زی ۔حض:۔بیضادی۔ فوخ الگا ة٠‏ میں الصایع ۔حص جا الاصول۔ و ؛۔ ارچ الذبوۃ مو مواہب لرلیہ۔ صضر: ردنا لاججاب ۔ فا :۔شفارقاضی عیاض بچھی:۔ ابس ہوزی عحل: مین ۔ مم :- مطا بع السرات۔ بح :۔ابوا تھے جم :این اسحمق آو:۔ترراۃ۔الن:۔اجیل۔ لو:۔زورع:۔ررابرخسشس مرح اصنات۔ لع ..اوئعلی ۔ححت :عم زی ۔حص ۱ نشین رھ رزساین مردوں بسفض:۔ سولتعادۃ۔عمو:۔ درتفور۔ ل :۔ابن ال جھد۔ا بن انی عاس۔سھھ۔ سیل تاضیطب+ ترحیب اب السعادات .لف ؛۔کفایہ۔ بل:۔ پا حث ؛۔ درمختار ھی ؛ذخی ھن :دا اضنزل 5 : مفار۔ لق : متقط ۔حب :- مع !لحرین۔ پر ×۔ راع سا :قامی فاں۔لں:۔ مطالب ام نہ ۔عل: معدن۔ ھا : ۔بعار ۔ ھ:۔ پر ورائن۔ رج :ری رت :رز ت شب اشاہ ۔ فی زراد نال بحف+: جحفمحدی ۔شل :توبات شف الین کو نی ۔ ۔کتوبات مجددالف نا تی احرکریندی مم شرع مفیامصل لان امر لاج ۔ شا :ضر نقاک لعل ارقاری۔ حط:خعط۔ قتٹ ہ نات ۔

ناو ک مب نصاف س ےئید ےکر لا نا لی من تقال دا نظرال سا قال مشک اہی بے گی نت فیا نس بل ا مکودیکھی ںکہماغ زا سکا تر ن دمدیث داقرالممایہ دنالعین واشروعدار را سخین و

ےھ

ما طرقت وجتمدی نامت ہیں اد رج مطائف اپنے زین سے مکھے ہیں دہ بھی اصو ل شرع اوریریۃزساف

۲۳

فی تع زا اگراس را اغا کسی با خاعل وی بنا دیں لیکن زبان لسن دتشنی سر ٹون اقصورلەن یکا رز رو کا نہمیں۔داسأل اہ ان یجنبتی عن الذطاروالزلل : ویخفظنی من أإ الخلل: ددوقغنی مایحت؟ترضی: دید یقی طریق الوصول ال چتابہالاعلی : ولعصمنی می ٠‏ العال دتفرق البال: ویبعں نی عن‌جمودالقریحة وتغیرالاحوال+ دای لی جمممناگتايپ عاقدی علی طرلق الصواب.: ویشریہ بتشریف القبول العظیم + دیجعلہ خالصًا لوجہ اڑج لی حیں سیں ا مرسلین: والخروعوانا انا مد لله رب العالمین ۔

ال اثرتقدِ ارگ٠‏ ائرنشرے َكَ صد رك خ ری ایک رو زصرورعا علیہ دسرنے جناب ای میں عم پیا ضرا یا قرنے رای کوشاحت لت سےاورم کان ای / ایا سا ڈول اورلو ےگوداددکا مطیع اررتن اوراش ادربورکیسما ںکا کرد اھ ا سلرامت ای 3با جوا بآیا ریغ لت سَنْ رک رَيَسَمتَاعاگ وزرنگ انی ا لقض کور تھا لگ .کیا نکدولا ہم نےتیرے لے تی راسنہ اور مارایا تجھدسے وچ تاج رر نے تیری بی نود اور گے لے کوک رش دہ اہ ےکاکرا ا ھکوچم نے ؛پنا خی کیا از سی ہعول دیالظہ د لا دراو رمحرفت ادرلزت مناجات اور مامت اور ذ وق حضورادرضوق دارآعزت تھارے دلی ںیا ڈے اسما یکااٹھانا اس پرآسان ہما دے (وردعوتقلق مناجا تم سے اورک ل صیرت تصلیخ کی ال کے سان ایک وقت میس بجع ہو کے مان خوبیوں اورکرامتو کی برول تب و وەمقامعنایت

لت ابا می کو اس سے رضشہت ہے آو جو موس یکوال اع ممصا ٌ کے بعدرکدہطورر رولت پچکلای 2 درگیا تم وت نایات ا ورذززق سےک جو تماری پت بای تگراں تھا نجات دیکر لا مکا ں ِذ بل اپے دیزارے شرف ۰ امام ملاراعلی میں تہماری قرب ومنزو تکا شبرہ ہوگیا۔اگردا ود ما نکوعا لیبس کیا کرٹ کر موی رقدرت دیکہغادمول سے مان رتیارے ' انت ہیں اور پاہہوا ں گی رح تہاریے دشھمنوں سے ارت ہیں اس عال یکر یہی جھ درضالت ے واتٹ < ہوا رتا ر ےگڑے رت کے ات مع الشه قش ِ مار گصوالت می کے سان سای ہے۔الہت مق کے سا تسا ہے ۔ لکل بغمبروں نےطح ط کی عیببتیں ای مہ بیرقت امب .جم ھی چا را نک طرح نت ومشقت اکر دا مڑبہ اض مقام سے بھی تاد رکرے کال رت اعت ادراننے ر بک طرت رقب تک ریت یتمارا 1 رت اس سے برتراد داع ےکہ زتی اک یعلوشت اوریا دشاہی یا جاری خلت اورہمکلای رتناعت 7 سرک یکو نے لے بر سے اگو۔ تممکوچلین/ ہا ری نزات کےسواکسی سےکام بر اوتع وعطا 7

۴ ش رح صدد ا اہو شر صدکےتددا زان سے دا رق تر خلا کے ادا مین مو نکی ہے ہو زکلام سے